ادارہ ادب اسلامی ہند کے تحت طرحی نشست کا اہتمام

نئی دہلی، ۲ فروری: مورخہ ۱۳جنوری ۶۱۰۲ءکو دفترادارہ ادب اسلامی ہندمیں جامعہ نگر یونٹ کی ماہانہ طرحی نشست منعقد ہوئی۔ ادارہ کے حلقہ دہلی کے سرپرست اور استادشاعر جناب ابرارکرتپوری نے صدارت فرمائی۔ ادارہ کے کل ہند نائب صدر جناب انتظار نعیم، مہمان اعزازی اورمعروف شاعر برقی اعظمی بطور مہمان خصوصی اسٹیج پر جلوہ افروز تھے۔ محب اللہ قاسمی کی تلاوت کلام پاک سے پروگرام کا آغاز ہوا جب کہ پروگرام کی نظامت جناب حامد علی اختر نے کی۔
Tarahi Mushaira
مصارع طرح یہ تھے:
تم سے ہم ہاتھ ملائیں تو ملائیں کیسے (حفیظ مرٹھی)
امواج بلا سے جنھیں لڑنا نہیں آتا (حفیظ بنارسی)
جن شعراء نے کلام پیش کیا ان کے منتخب اشعار نذر قارئین ہیں:
اظہار مسرت کے بھی کچھ ہوتے ہیں آداب
یہ آپ نہ سمجھیں ہمیں ہنسنا نہیں آتا (ابرار کرتپوری)
۔۔۔۔۔۔۔۔
شعلے گر سامنے بھڑکیں تو چھڑک دیں پانی
آگ جب دل میں لگی ہو تو بجھائیں کیسے (انتظار نعیم )
۔۔۔۔۔۔۔۔۔
موت کا رقص شب و روز ہو جب پیش نظر
ایسے میں جشن منائیں تو منائیں کیسے (ڈاکٹربرقی اعظمی)
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اب اندھیرے بھی زمانے کو بھلے لگتے ہیں
رخ بدلتی ہیں زمانے کی ہوائیں کیسے (سید راشد حامدی)
اس طرحی نشست میں با ذوق اور با شعور سامعین کی بڑی تعداد شریک رہی،جن میں پروفیسر محمد رفعت، ڈاکٹرمحمد رضی الاسلام ندوی، محمد زن العابدین منصوری، صالح شبیبی، ابوالخیرشازی، اشرف بستوی قابل ذکر ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *