سعودی عرب کی شیعہ مسجد پر حملہ، تین ہلاک

دمّام /نئی دہلی، ۲۹ جنوری (ایجنسیاں): سعودی عرب کی ایک شیعہ مسجد پر حملے کی خبریں موصول ہو رہی ہیں، جس میں ابھی تک ۳ افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاع ہے۔
’مڈل ایسٹ آئی‘ کی خبروں کے مطابق، جمعہ کی صبح کو سعودی عرب کے مشرقی صوبہ میں شیعہ مسلک کی ایک مسجد پر چند مسلح افراد نے نمازیوں پر حملہ کر دیا۔ اطلاعات کے مطابق، صوبائی راجدھانی الدمّام سے ۱۵۰ کلومیٹر جنوب میں واقع محاسن گاؤں کی امام رِداہ مسجد میں بم دھماکہ ہوا۔ یہ دھماکہ غالباً خودکش حملہ آور نے کیا تھا، جس سے اس کی وہیں پرموت ہو گئی۔ اس کے بعد آرامکو نامی شہر سے متصل ایک گاؤں میں دوسری مسجد میں چند بندوق برداروں نے نمازیوں پر گولیاں چلانی شروع کر دیں، جس میں اب تک ۳ افراد کے مارے جانے کی خبر ہے۔
’مڈل ایسٹ آئی‘ کے مطابق، مقامی پولس نے ان دونوں ہی حملوں میں بھاری تعداد میں لوگوں کے زخمی ہونے کی خبر دی ہے۔ ’مڈل ایسٹ آئی‘ کی ویب سائٹ پر حملے کے وقت کی ویڈیو فوٹیج بھی ڈالی گئی ہے، جس میں نمازی پریشانی کے عالم میں بھاگتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔
سوشل نیٹ ورکنگ سائٹ ٹوئٹر پر دیگر مقامی ذرائع سے بھی اس حملے کی خبریں موصول ہو رہی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق، بندوق برداروں میں سے کم از کم پانچ جائے وقوع سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے، تاہم ان میں سے ایک پکڑا گیا ہے، جسے پہلے نے مسجد میں موجود نمازیوں نے جم کر پیٹا، اس کے بعد اسے پولس کے حوالے کر دیا۔ مزید اطلاعات کا ابھی انتظار ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *