یاد رفتگاں: ڈاکٹر انور سدید مرحوم

انور سدید
انور سدید

احمد علی برقی ؔ اعظمی

چل دیے بزمِ جہاں سے ڈاکٹر انور سدید
نقدِ ادبی میں تھے جو اک حاملِ ذہنِ جدید

اردو دنیا کے لیے ہے یہ خسارہ اک عظیم
اہلِ دانش کے لیے جس کی ضرورت تھی شدید

لوگ کہتے تھے انہیں اردو کا بابائے ادب
جملہ اصنافِ ادب میں ہیں کتب جن کی مفید

ضوفگن تھی آسمانِ فکر و فن پر جس کی ذات
وہ ستارہ ہو گیا چرخِ ادب کا ناپدید

چل بسے ہمراہ اپنے لے کے وہ سوئے جناں
قفلِ افسانہ نویسی کی تھی برقیؔ کلی جو کلید

(تصویر بشکریہ احمد علی برقی اعظمی)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *