جامعہ ملیہ اسلامیہ کے ہاسٹلوں میں سالانہ تقریبات کا نعقاد

تعلیم کے ساتھ تربیت اور ہم نصابی سرگرمیوں کا شخصیت کی تعمیر میں اہم رول : پروفیسر طلعت احمد

????????????????????????????????????

نئی دہلی : تعلیم و تربیت دونوں کی اہمیت بہت زیادہ ہے۔ ہاسٹل کی اقامتی زندگی طلبہ کو تعلیم کے ساتھ ساتھ تربیت کے عملی مواقع فراہم کرتی ہے اور اس سے ان کی زندگی میں نکھار اور وقار پیدا ہوتا ہے۔ آپ لوگ خوش قسمت ہیں کہ آپ کو دہلی جیسے مصروف شہر میں ہاسٹل کی پرسکون فضا اور دیگر تعلیمی و تربیتی سہولتیں میسر ہیں۔ ان خیالات کا اظہار پروفیسر طلعت احمد، شیخ الجامعہ، جامعہ ملیہ اسلامیہ نے ہال آف بوائز کیمپس اے میں مقیم طلبہ کو خطاب کرتے ہوئے کیا۔ پروفیسر احمد کیمپس میں کھیل اور ثقافتی پروگراموں میں نمایاں کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے طلبہ کے لیے منعقد تقسیم انعامات کی تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ اس موقع پر کیمپس میں مقیم طلبہ نے رنگا رنگ ثقافتی پروگرام بھی پیش کیا۔

تقریب میں مہمان خصوصی ، پروفیسر طلعت احمد کا استقبال کرتے ہوئے پرووسٹ پروفیسر اقتدار محمد خان نے کہا کہ پروفیسر احمد کے جامعہ میں آنے کے بعد سے یہاں کا تعلیمی و تربیتی ماحول بہتر ہوا ہے۔ انہوں نے تعلیم کے ساتھ ساتھ تحقیق پر بھی زور دیا ہے۔ اسی طرح انہوں نے جامعہ کی اقدار و روایات کی بحالی پر خاص توجہ دی ہے۔ انہوں نے دیگر مہمانوں خاص طور پر فائنانس آفیسر جناب سنجے کمار، ڈین اسٹوڈنٹس ویلفیئر پروفیسر تسنیم مینائی، چیف پراکٹر پروفیسر مہتاب عالم، ڈین اکیڈمکس پروفیسرتبریز عالم، ڈین فیکلٹی آف سائنس پروفیسر شریف احمد، ڈین فیکلٹی آف فائن آرٹس پروفیسرصدرعالم، ڈائریکٹر اسپورٹس پروفیسر سنجے سنگھ، سیکورٹی ایڈوائزر جناب علوی، پرووسٹ ہال آف گرلس پروفیسر مہتاب منظر، پروفیسر باراں فاروقی، پرووسٹ کیمپس بی پروفیسر ہارون سجاد، پرووسٹ اسکولس پروفیسرعتیق الرحمان ڈاکٹر منصف عالم اور ڈاکٹر ارشد خان کا بھی استقبال کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس پروگرام کی کامیابی میں ہال کے وارڈنس ڈاکٹر محمد شاہد خان، ڈاکٹر ارشد اکرام، ڈاکٹر نفیس احمد، ڈاکٹر شاہ ابولفیض اور ڈاکٹر محمد ارشد کی کوششیں کار فرما رہی ہیں۔
اس موقع پر ڈین اسٹوڈنٹس ویلفیئر پروفیسر تسنیم مینائی نے بھی طلبہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ثقافتی سرگرمیاں جامعہ کی روایت کا اہم حصہ رہی ہیں اور ہاسٹل میں ان کا احیاء ایک خوش آئند قدم ہے۔
پروگرام کا آغاز جامعہ کی روایت کے مطابق تلاوت کلام پاک سے ہوا۔ اس کے بعد نعت شریف پڑھی گئی۔ غزل، گیت اور نظم کے علاوہ ہال کی سرگرمیوں پر مشتمل ایک ڈاکیومنٹری سے بھی شرکاء محظوظ ہوئے۔ آخر میں سینئر وارڈن ڈاکٹر ارشد اکرام نے مہمانوں، طلبہ،ہاسٹل اسٹاف اور اپنے ساتھیوں کا پروگرام کے خوش اسلوبی کے ساتھ انعقاد پر شکریہ ادا کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *