اقلیتوں کی فلاح کے بغیر بہار کی ترقی ناممکن: ڈاکٹر انجم

پٹنہ، ۳۱؍اکتوبر:بہار کی ترقی کا خواب اس وقت تک پورا نہیں ہوگا جب تک اس کا پھل اقلیتی طبقے کے گھروں تک نہیں پہنچے گا۔ یہ بات بی این منڈل یونیورسٹی مدھے پورہ کے شعبۂ تاریخ کے ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر امتیاز انجم نے ’نیوز ان خبرڈاٹ کام‘ کے ساتھ ایک ملاقات میں کہی۔ انہوں نے کہا کہ جو پارٹیاں دلتوں، مہادلتوں ، پسماندہ طبقات اور اقلیتوں کو حاشیے پر رکھ کر بہار اور ملک کی ترقی کی بات کرتی ہیں، وہ عوام کو دھوکہ دے رہی ہیں کیونکہ آبادی کے ایک بڑے حصے کو ترقی کی شاہراہ سے دور کردینے سے بہار اور ملک کی بھلائی نہیں ہونے والی ہے۔

ڈاکٹر امتیاز انجم نے وزیر اعظم نریندر مودی اور بی جے پی صدر امت شاہ کا نام لیے بغیر کہا کہ جس طرح سماج کوبانٹنے کی کوشش ہورہی ہے وہ خطرناک ہے۔ انہوں نے کہا کہ بہار کو ایک ایسی حکومت چاہیے جو سیکولر اقدار کی بحالی اور برقراری کو یقینی بناسکے۔ اس لیے ریاست کے سیکولر اور انصاف پسندعوام پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ ایسی سیاسی جماعتوں اور ان کے اتحاد کو کامیاب بنائیں جو سماج کے آخری صف میں کھڑے افراد کی فلاح وبہبود کو یقینی بناسکے۔

ڈاکٹر انجم نے کہا کہ ترقی کے لیے امن وامان کی فضا کا قائم رہنا ضروری ہے۔ کیونکہ جب تک امن وامان قائم نہیں رہے گا، لوگ سکون سے کام پر نہیں جائیں گے اور چین کی نیند نہیں سوئیں گے ، تب تک ترقیاتی منصوبوں کو عملی جامہ پہنانا ممکن نہیں ہوگا۔

اس کے ساتھ ہی انہوں نے عوام سے انتخابی عمل میں پورے جوش وخروش کے ساتھ حصہ لینے کی اپیل کی اور کہا کہ الیکشن جمہوریت کا سب سے بڑا تہوار ہوتا ہے ​​جسے سب لوگوں کو مل کر منانا چاہیے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *