نتیش کمار پھر بنے بہار کے وزیر اعلیٰ

پٹنہ، ۲۰؍نومبر(نامہ نگار)ریاست بہارکی راجدھانی پٹنہ کے تاریخی میدان میں جنتادل متحدہ کے رہنما نتیش کمار نے آج وزیر اعلیٰ کے طور پر عہدہ اوررازداری کا حلف لیا۔انہیں گورنر رام ناتھ کوند نے عہدہ اور رازداری کا حلف دلایا۔ اسی کے ساتھ نتیش کمار پانچویں بار بہار کی کمان سنبھالنے والے لیڈر بن گئے۔ ان کے ساتھ ۲۸؍ وزراء نے بھی حلف لیا۔

نتیش کمار کی وزارتی کاؤنسل کے ارکان پر ایک نظر:
۱۔ تیجسوی یادو(راشٹریہ جنتادل )لالو پرساد یادو کے چھوٹے فرزند تیجسوی یادونے راگھوپور اسمبلی حلقہ سے بی جے پی کے امیدوار ستیش یادو کو شکست دی۔

IMG-20151121-WA0032۲۔ تیج پرتاپ یادو (راشٹریہ جنتادل): انہوں نے مہوا اسمبلی حلقہ سے بی جے پی کے امیدواررویندر رائے کے خلاف جیت درج کی۔

۳۔ عبدالباری صدیقی(راشٹریہ جنتادل): پارٹی کے تجربہ کار اور قدآور رہنماؤں میں سے ایک عبدالباری صدیقی نے علی نگر اسمبلی حلقہ میں بی جے پی امیدوار مشری لال کو شکست دے کرکامیابی حاصل کی۔

۴۔ آلوک کمار مہتا(راشٹریہ جنتادل): وہ اجیارپور اسمبلی حلقہ سے راشٹریہ لوک سمتاپارٹی کے امیدوار کمار اننت کو ہرا کر رکن اسمبلی بنے۔اننت کمار پارلیمنٹ کے رکن بھی رہ چکے ہیں۔

۵۔چندریکار ائے (راشٹریہ جنتادل): لالو پرساد کے بھروسے مند ساتھیوں میں سے ایک چندریکارائے پرسا اسمبلی حلقہ سے لوک جن شکتی کے امیدوار کر شکست دینے میں کامیاب ہوئے۔

۶۔ رام وچار رائے (راشٹریہ جنتادل): انہوں نے صاحب گنج اسمبلی حلقہ سے بی جے پی امیدوار راجوکمار سنگھ کو شکست دی

۷۔ شیو چندر رام (راشٹریہ جنتادل):انہوں نے راجاپاکڑ اسمبلی حلقہ سے لوک جن شکتی پارٹی کے لیڈر رام ناتھ رمن کو شکست دے کر کامیابی حاصل کی۔

۸۔ ڈاکٹر عبدالغفور(راشٹریہ جنتادل): انہوں نے مہسی اسمبلی سیٹ سے راشٹریہ لوک سمتا پارٹی کے امیدوار چندن ساہ کو شکست دی۔

۹۔ چندرشیکھر(راشٹریہ جنتادل): انہوں نے مدھے پورہ اسمبلی حلقہ سے بی جے پی امیدوار وجے کمار ’بمل‘ کوشکست دے کر جیت درج کی۔

۱۰۔ مونیشور چودھری(راشٹریہ جنتادل): وہ گرکھا اسمبلی سیٹ سے بی جے پی امیدوار گیان چند مانجھی کو شکست دے کر رکن اسمبلی بنے۔

۱۱۔ انیتا دیوی (راشٹریہ جنتادل): نوکھا اسمبلی حلقہ سے انہوں نے بی جے پی کے قدآور لیڈر رامیشور چورسیا کو شکست دی ۔

۱۲۔ وجے پرکاش (راشٹریہ جنتادل): انہوں نے جموئی اسمبلی حلقہ سے بی جے پی امیدوار اجے پرتاپ کے خلاف جیت درج کی۔

۱۳۔ وجیندر پرتاپ یادو(جنتادل متحدہ):یہ سپول اسمبلی حلقہ سے بی جے پی کے امیدوار کرشن کمار کو ہراکر رکن اسمبلی بنے۔

۱۴۔راجیو رنجن سنگھ عرف للن سنگھ(جنتادل متحدہ): بہار اسمبلی کاؤنسل کے رکن ہیں اور وزیر اعلیٰ نتیش کمار کے بھروسے مند ساتھی مانے جاتے ہیں۔ جیتن رام مانجھی نے انہیں اپنی وزارت سے برخاست کردیا تھا۔

۱۵۔ شرون کمار (جنتادل متحدہ): نالندہ اسمبلی حلقہ سے بی جے پی کے امیدوار کوشلیندر کمار کو شکست دے کر رکن اسمبلی بنے۔

۱۶۔ جے کمار سنگھ (جنتادل متحدہ): انہوں نے دینارا اسمبلی سیٹ پر بی جے پی کے راجندر پرساد کو ہراکر جیت درج کی۔

۱۷۔ کرشن نندن پرساد ورما (جنتادل متحدہ): گھوشی اسمبلی حلقہ سے ہندوستان عوام مورچہ (سیکولر) کے راہل شرما کو شکست دی۔

۱۸۔ مہیشور ہزاری (جنتادل متحدہ): انہوں نے لوک جن شکتی پارٹی کے امیدوار پرنس راج کوکلیان پور اسمبلی حلقہ میں ہرایا۔

۱۹۔ شیلیش کمار (جنتادل متحدہ): وہ مالپور اسمبلی حلقہ سے لوک جن شکتی پارٹی کے امیدوار ہمانشو کنور کو شکست دینے میں کامیاب رہے۔

۲۰۔ کماری منجو ورما (جنتادل متحدہ): انہوں نے چیریابریارپوراسمبلی حلقہ سے لوک جن شکتی پارٹی کے انل کمار چودھری پر جیت حاصل کی۔

۲۱۔ سنتوش کمار نرالا(جنتادل متحدہ): وہ راجپور اسمبلی سیٹ سے بی جے پی امیدوار وشوناتھ رام کو ہرانے میں کامیاب ہوئے۔

۲۲۔ خورشید عرف فیروز احمد (جنتادل متحدہ): وہ سکٹا سے بی جے پی امیدوار دلیپ ورما کو ہراکر رکن اسمبلی بنے۔

۲۳۔ مدن ساہنی(جنتادل متحدہ): انہوں نے گورا بورام اسمبلی سیٹ پر لوک جن شکتی پارٹی کے امیدوار ونود ساہنی کو شکست دی۔

۲۴۔ کپل دیو کامت (جنتادل متحدہ): انہوں نے بابو برہی سیٹ سے لوک جن شکتی پارٹی کے امیدوار ونود کمار سنگھ کو ہرایا۔

۲۵۔اشوک چودھری (کانگریس): بہار قانون ساز کاؤنسل کے رکن اور کانگریس پارٹی کے ریاستی صدر ہیں۔

۲۶۔ ڈاکٹر مدن موہن جھا (کانگریس): بہار قانون ساز کاؤنسل کے رکن ہیں۔

۲۷۔ عبدالجلیل مستان (کانگریس): انہوں نے آمور اسمبلی حلقہ سے بی جے پی امیدوار صبا ظفر کو شکست دی۔

۲۸۔ اودھیش کمار سنگھ (کانگریس): انہوں نے وزیر گنج اسمبلی حلقہ سے بی جے پی کے امیدوار بیریندر سنگھ کو ہرایا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *