مفاد عامہ والے اسکیموں کا فائدہ ہماری قوم نہیں اٹھا پاتی ہے.تقی الدین احمد

وجیہ احمد تصور ✍️
سہرسہ… سلکھوا بلاک کے ہریوہ گاؤں کے مدرسہ دارلعلوم فیضان وارث میں ضلع ایجوکیشن افسر ڈاکٹر محمد تقی الدین احمد نے جو فی الحال آر ڈی ڈی کے بھی چارج میں ہیں تشریف لائے اور مدرسہ کے کمیٹی اراکین، اساتذہ اور گاؤں کے معزز افراد سے ملاقات کر حکومت کے ذریعہ مسلمانوں کے لئے چلائے جا رہے اسکیموں کی جانکاری دی.
        اس موقع پر ڈاکٹر تقی الدین احمد نے مدرسہ انتظامیہ، اساتذہ اور طلباء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تعلیم وقت کی سب سے اہم ضرورت ہے اور اس میدان میں جو قوم پیچھے چھوٹ جائے گی وہ  کبھی ترقی نہیں کر سکتی ہے.
انہوں نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ آج ہم کھانے پر فضول خرچ کر لمبا دسترخوان کو اپنی شان سمجھ لیتے ہیں، شادی بیاہ میں فضول خرچ کرنے کوتاہی نہیں کرتے ہیں مگر پڑھائ پر ہمارا بجٹ سب سے کم ہوتا ہے اس سوچ کو ہمیں بدلنا پڑے گا. خاص کر لڑکیوں کی تعلیم پر زیادہ توجہ دینے کی ضرورت ہے کیونکہ ایک لڑکی کی تعلیم سے پورے فیملی کو فائدہ پہنچتا ہے. انہون نے طالب علموں سے خوب دل لگا کر پڑھنے اور مقابلہ جاتی امتحانات کی تیاری کر نے کا ماحول سازگار بنانے پر زور دیا. انہوں نے سات یقینی اسکیم کے متعلق معلومات فراہم کرتے ہوئے کہا کہ مسلمانوں کے اندر بیداری نہیں ہونے کی وجہ سے بہت سارے مفاد عامہ والے اسکیموں کا فائدہ ہماری قوم نہیں اٹھا پاتی ہے. انہوں نے سات یقینی اسکیم کو اچھے ڈھنگ سے سمجھ کر اس سے استفادہ حاصل کرنے پر زور دیا.
اس سے قبل ضلع ایجوکیشن افسر کے مدرسہ میں پہنچنے پر مدرسہ کمیٹی، اساتذہ اور طلباء نے پرزور خیرمقدم کیا. اس موقع پر ڈاکٹر تقی الدین احمد نے مدرسہ کا معائنہ کرنے کے بعد اطمینان کا اظہار کیا اور مدرسہ کو منظوری دلوانے میں اپنے ہرممکن تعاون کی یقین دہانی کرائی.  اس موقع پر مدرسہ کے صدر الحاج شوکت علی، سابق صدر الحاج اویس احمد، مولانا عزیر احمد، مولانا شمشیر عالم، زاھد اقبال، ذوالقرنین، شفیق وارث، مفتی رضوان، مولانا سلیم القادری بھی موجود تھے.
Facebook Comments
Spread the love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply