ہار کے ساتھ نیوزی لینڈ کا خواب چکنا چور، انگلینڈ فائنل میں

england-beat-nz-2016-wt20نئی دہلی، ۳۰؍ مارچ (سی این ایم)

جیسن رائے (۷۸) کی طوفانی اننگ کی بدولت انگلینڈ کرکٹ ٹیم نے بدھ کو یہاں فیروز شاہ کوٹلہ میدان پر کھیلے گئے آئی سی سی ٹی -۲۰ ورلڈ کپ ۲۰۱۶ کے پہلے سیمی فائنل میں نیوزی لینڈ کو سات وکٹوں سے شکست دے کر فائنل میں جگہ بنا لی ہے.

ٹاس ہار کر پہلے بلے بازی کرتے ہوئے نیوزی لینڈ کی ٹیم نے مقررہ ۲۰ اووروں میں آٹھ وکٹ کے نقصان پر ۱۵۳ رن بنائے تھے. انگلینڈ نے ۱ء۱۷ اوور میں تین وکٹ کھو کر اس ہدف کو حاصل کر لیا.

اسی جیت کے ساتھ انگلینڈ نے دوسری بار ٹی -۲۰ ورلڈ کپ کے فائنل میں جگہ بنا ئی ہے. ورلڈ کپ کا فائنل تین اپریل کو کولکاتا کے ایڈن گارڈن اسٹیڈیم میں کھیلا جائے گا.

نیوزی لینڈ ٹیم کی اس ٹی -۲۰ ورلڈ کپ میں یہ پہلی شکست تھی اور اسی کے ساتھ اس کا پہلی بار عالمی فاتح بننے کا خواب بھی چکنا چور ہو گیا. ہدف کا تعاقب کرنے اتری انگلینڈ کی ٹیم کو رائے اور ایلیکس ہیلز (۲۰) نے شاندار شروعات دی. دونوں نے پہلے وکٹ کے لیے ۲ء۸ اوور میں ۸۲ رن جوڑے. پورے ورلڈ کپ میں اپنی شاندار بالنگ سے اپوزیشن بلے بازوں کو پریشان کرنے والے کیوی ٹیم کے گیندباز ان دونوں کے سامنے بے بس نظر آ رہے تھے.

کیوی ٹیم کو پہلی کامیابی ٹیم کے سب سے زیادہ کامیاب بالر ایش سوڑھي نے دلائی. انہوں نے ہیلز کو پویلین بھیجا. اس کے بعد جوئے روٹ (ناٹ آؤٹ ۲۷) نے رائے کا ساتھ دیا. روٹ ایک ایک رن لے کر رائے کو بلے بازی کرنے کا موقع دے رہے تھے اور رائے کیوی گیند بازوں کے چھکے چھڑا رہے تھے.

رائے کو مشیل سینٹنر نے ۱۱۰ کے مجموعی اسکور پر پویلین بھیجا. رائے جاتے جاتے اپنا کام کر گئے تھے. انہوں نے اپنی اننگ میں ۴۴ گیندوں کا سامنا کیا اور دو چھکے اور ۱۱ چوکے لگائے. رائے کو مین آف دی میچ قکرار دیا گیا. اگلے ہی اوور میں سوڑھي نے کپتان ایون مورگن کو کھاتہ کھولنے سے پہلے ہی پویلین بھیج دیا.

اس کے بعد جوس بٹلر نے آخر میں ۱۷ گیندوں میں ناٹ آؤٹ ۳۲ رنوں کی جارحانہ اننگ کھیل کر ٹیم کو جیت دلائی. انہوں نے اپنی اننگ میں تین چھکے اور دو چوکے لگائے.

نیوزی لینڈ کی جانب سے سوڑھي نے دو اور سینٹنر نے ایک وکٹ لیا.

اس سے پہلے بلے بازی کرنے اتری کیوی ٹیم نے تیزی سے شروعات کی لیکن آخری اووروں میں تیزی سے وکٹ گنوانے کی وجہ سے ٹیم بڑا اسکور نہیں بنا سکی۔

کیوی ٹیم کو مارٹن گپٹل (۱۵) نے تیز شروعات دی لیکن وہ جلد ہی ۱۷ کے مجموعی اسکور پر آؤٹ ہوگئے. اس کے بعد کپتان کین ولیمسن (۳۲) اور کولن منرو (۴۶) نے دوسرے وکٹ کے لیے صرف ۵۰ گیندوں پر ۷۴ رن بنائے.

ولیمسن ۹۱ کے مجموعی اسکور پر پویلین لوٹے تو منرو ۱۰۷ کے مجموعی اسکور پر آؤٹ ہوئے. اس کے بعد کیوی ٹیم کے بلے باز جلدی جلدی رن بنانے کے چکر میں ایک کے بعد ایک وکٹ گنواتے رہے اور ٹیم پورے ۲۰ اوور میں ۱۵۳ رن ہی بنا سکی. انگلینڈ کی جانب سے بین اسٹاکس نے تین وکٹ لیے جبکہ معین علی، ڈیوڈ ویلی، کرس جارڈن اور لیم پلنکٹ کو ایک ایک وکٹ ملے.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *