جنوخبی افریقہ پر انگلینڈ کی شاندار جیت

جو روٹ
جو روٹ

ممبئی، ۱۸ مارچ، (سی این ایم) ممبئی کے وانكھیڑے اسٹیڈیم میں کھیلے گئے ورلڈ کپ ٹي- ۲۰ کے ۱۸ویں میچ میں انگلینڈ کی ٹیم نے جنوبی افریقہ کو دو وکٹ سے ہرا دیا. انگلینڈ کے بلے بازوں نے بہتر کھیل کا مظاہرہ کیا۔ خاص طور سے جو روٹ نے طوفانی بلے بازی کرتے ہوئے صرف ۴۴ گیندوں پر۸۳ رن کی اننگ کھیلی تو ساتھ ہی اوپنر بلے باز جیسن رائے نے ۴۳ رنز کی اننگ کھیل کر انگلینڈ کے لیے جیت کی بنیاد رکھی.

اس سے پہلے انگلینڈ نے ٹاس جیت کر جنوبی افریقہ کو بلے بازی کی دعوت دی. جنوبی افریقہ کی ٹیم نے زبردست بلے بازی کی اور ہاشم آملہ کے ۳۱ گیند پر ۵۸ رن اور كوئنٹن ڈیکاك کے ۵۲ رنوں کے سہارے ۲۲۹ رنوں کا بڑا اسکور کھڑا کیا. ان دونوں بلے بازوں کے علاوہ آخری اووروں میں جے پی ڈومنی کے ۲۸ گیند پر ۵۴ رن اور ڈیوڈ ملر کے ۲۸ رنوں نے بھی جنوبی افریقہ کی ٹیم کے اسکور کو مقررہ ۲۰ اووروں میں چار وکٹ کے نقصان پر یہاں تک پہنچانے میں مدد کی۔ انگلینڈ کے طرف سے بالنگ میں معین علی نے ۲ وکٹ حاصل کیے تو وہیں ڈیوڈ ویلی اور عادل رشید کو ایک ایک وکٹ ملا.
جنوبی افریقہ کے ذریعے دیے گئے۲۳۰ رنوں کے ہدف کو انگلینڈ کی ٹیم نے جو روٹ کے دھماکے دار ۸۳ رنوں اور جیسن رائے کے ۴۳ رن کی بدولت آسان بنا دیا. اس کے بعد جوزف بٹلر نے ۲۱ اور معین علی نے آخری وقت میں آٹھ رنوں کی اننگ کھیل کر انگلینڈ کو ریکارڈ توڑ جیت دلا دی. ساؤتھ افریقہ کی طرف سے کوئی بھی بالر کمال نہیں کر سکا، تاہم آخری اووروں میں انگلینڈ کے بلے باز پویلین کا رخ کرنے لگے تھےلیکن ۴ء۱۹ اوور میں معین علی نے وننگ شاٹ لگا کر انگلینڈ کو شاندار جیت دلا دی.
ٹي- ۲۰ ورلڈ کپ کی تاریخ میں انگلینڈ کی طرف سے ہدف کا پیچھا کیا گیا یہ اسکور سب سے زیادہ ہے تو وہیں ٹي- ۲۰ کرکٹ کی تاریخ میں کامیابی سے پیچھا کیا گیا یہ دوسرا سب سے بڑا اسکور ہے. اس کے ساتھ ہی ہندوستان میں کسی ٹیم نے پہلی بار ٹي- ۲۰ کرکٹ میں اتنے بڑے اسکور کا ہدف حاصل کیا ہے.
ساؤتھ افریقہ کی طرف سے بالنگ میں کائل اببوٹ نے ۳ وکٹ حاصل کیے تو وہیں كگسو ربادا کو ۲ وکٹ ملا. عمران طاہر اور جین پال ڈومنی کو ایک ایک وکٹ ملا. جو روٹ کو ان کی شاندار کارکردگی کے لیے مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *