درج فہرست ذات و قبائل اور اقلتیوں کے لئے فنڈز میں اضافہ

نئی دہلی، یکم فروری، خزانہ اور کارپوریٹ امور کے وزیر ارون جیٹلی نے آج پارلیمنٹ میں 18۔2017 کا عام بجٹ پیش کرتے ہوئے کہا کہ حکومت درج فہرست ذاتوں، درج فہرست قبائل اور اقلیتوں کی فلاح و بہبود کے لئے اسکیموں کے نفاذ کو خصوصی اہمیت دے رہی ہے۔ درج فہرست ذاتوں کے لئے مختص رقم مالی سال 18۔2017 کے دوران 38833 کروڑ روپے تھی جو مالی سال 18۔2017 کے دوران بڑھاکر 52393 کروڑ روپے کردی گئی ہے۔ اس طرح سے اس میں 35 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔ درج فہرست قبائل کے لئے مختص رقم کو بڑھاکر 31920 کروڑ روپے کردیا گیا ہے جبکہ اقلیتوں کے لئے مختص رقم کو بڑھاکر 4195 کروڑ روپے کردیا گیا ہے۔ حکومت نیتی آیوگ کے ذریعہ مذکورہ شعبوں میں نتائج پر مبنی اخراجات کی نگرانی کے نظام کو متعارف کرے گی۔

وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے مزید کہا کہ بزرگ شہریوں کے لئے آدھار پر مبنی اسمارٹ کارڈ کو متعارف کرایا جائے گا جس میں ان کی صحت سے متعلق مکمل تفصیلات ہوں گی۔ اس کی شروعات مالی سال 18۔2017 کے دوران ملک کے 15 اضلاع میں تجرباتی پروجیکٹ کے طور پر کی جائے گی۔ علاوہ ازیں لائف انشورنس کارپوریشن (ایل آئی سی) بزرگ شہریوں کے لئے پنشن کی یقینی فراہمی کے لئے ایک اسکیم کو نافذ کرے گا جس کے تحت دس برسوں تک انہیں 8 فیصد سالانہ منافع کی گارنٹی دی جائے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *