لڑکیوں کو کمپیوٹرکی تعلیم سے جوڑناوقت کی اہم ضرورت: شاربہ سلیم

طیب ٹرسٹ سے آفس اسسٹنٹ کا کورس کرنے والی طالبات کو اسناد تقسیم
دیوبند،۱۵؍مارچ (پریس ریلیز):
یوم خواتین کی مناسبت سے طیب ٹرسٹ دیوبند میں عورتوں کے لیے ایک خصوصی پروگرام کا انعقاد کیاگیا،جس میں الخیر فاونڈیشن (برطانیہ) کے تعاون سے چل رہے کمپیوٹر ٹریننگ سینٹر سے آفس اسسٹنٹ کا کورس کرنے والے کل ۴۰؍طلبہ وطالبات کو مہمانوں کے ہاتھوں اسنادتقسیم کیے گئے۔

DSC_58671
ا س موقع پر مہمان خصوصی کی حیثیت سے شریک محترمہ شاربہ سلیم صدر الخیر فاونڈیشن (امریکہ )نے اپنے خطاب میں کہاکہ اللہ پاک نے دیوبند کو عالمی سطح پر جو مقبولیت اورمحبوبیت عطا کی ہے ،اس سے پوری دنیا بخوبی واقف ہے۔میرا تعلق اسی سرزمین سے ہے۔ آج مجھے ان بچیوں سے مل کر بیحد خوشی محسوس ہورہی ہے جنہوں نے دیوبندمیں رہتے ہوئے دورحاضرکے تقاضوں کو محسوس کیا اور کمپیوٹر کے اس اہم کور س کو مکمل کیاجویقیناًقابل فخر ہے۔خاص طور سے لڑکیوں کے لیے کوئی بھی ہنر انتہائی اہمیت کا حامل ہوتاہے۔ہنر کے ذریعہ ہم اپنی زندگی میں بڑی تبدیلی لاسکتے ہیں ۔انہوں نے مزیدکہاکہ ہندوستان میں طیب ٹرسٹ کے تعاون سے الخیر فاونڈیشن نے مختلف میدانوں میں جوفلاحی کام کیے ہیں اسے دیکھ کر دلی مسرت ہوئی ہے ۔طیب ٹرسٹ ایک مثالی ادارہ ہے جس کی جتنی بھی ستائش کی جائے کم ہے ۔
اس موقع پر محتر مہ خورشیدہ بیگم ناظمہ جامعہ الہامیہ للبنات دیوبند نے کہاکہ موجودہ دورمیں لڑکیوں کو دینی وعصری تعلیم کے ساتھ ساتھ جدید ٹکنالوجی سے جوڑنا بیحدضروری ہے تاکہ دورحاضر کے اعتبار سے وہ اپنی صلاحیتوں سے دنیا کو فیضاب کرسکیں ۔انہوں نے کہاکہ آج کمپیوٹر کی تعلیم زینت نہیں بلکہ ہر شخص کی ضرورت ہے ۔

????????????????????????????????????

طیب ٹرسٹ کے چیئرمین حافظ محمد عاصم قاسمی نے کہاکہ دیوبند جیسی جگہ میں پردہ دار لڑکیوں کے لیے ترقی کے مواقع کی کمی نہیں ہے، بس حوصلہ اورہمت کے ساتھ تعلیم اور ہنر کے ذریعہ آگے بڑھنے کی ضرورت ہے۔طیب ٹرسٹ نے اسکل ڈپولیمنٹ پروجکٹ کے تحت اس سمت میں قدم اٹھاتے ہوئے پورے ملک میں پردہ دار خواتین اور طلباء مدارس کے لیے قومی ایجنڈہ کے طور پر اس کورس کو شروع کیاجس سے اب تک ۱۵۰۰؍سے زائد طلبہ وطالبات روزگار پاچکے ہیں ۔
اس موقع پر محترمہ شاربہ سلیم ،محترمہ خورشیدہ بیگم اور محترمہ صبیحہ جمال کی مثالی خدمات کااعتراف کرتے ہوئے طیب ٹرسٹ کی جانب سے انہیں خصوصی ایوارڈ سے نوازاگیا۔اس تقریب کی نظامت کے فرائض حنافاطمہ نے بحسن وخوبی انجام دیے۔ تقسیم اسنادکی تقریب میں طالبات نے ثقافتی پروگرام بھی پیش کیے۔ اس تقریب میں غزالہ اختر، عائشہ ، رانی احسان، گلستاں، آفرین، سمیہ، اقراء، فرحا، ببلی، فوزیہ، فائزہ، تبسم،مریم ،آرزواور حنا خصوصی طور پر موجود رہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *