محرم کے بغیر حج پر جانا مجبوری نہیں ہے: چیئرمین

نئی دہلی :

حج کمیٹی آف انڈیا کے چیئرمین چودھری محبوب علی قیصر نے بغیر محرم کے 45 سے زیادہ عمر کی عورتوں کو حج پر جانے کی اجازت دیے جانے کو شریعت میں مداخلت ماننے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ نئی حج پالیسی میں کی سفارشات میں واضح طور سے درج ہے کہ جن عورتوں کا کوئی محرم نہیں ہے اور وہ حج پر جانا چاہتی ہیں اگر ان کا مسلک اجازت دیتا ہے تو وہ چار یا اس سے زیادہ کا گروپ بنا کر جا سکتی ہیں ۔

چودھری محبوب علی قیصر نے کہا کہ پہلے بغیر محرم کے حج پر جانے پر پابندی تھی،  نئی حج پالیسی میں اس پابندی کو ختم کرنے کی تجویز ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پابندی ہٹانے اور پابند بنانے میں بڑا فرق ہوتا ہے ۔حج کمیٹی آف انڈیا کے چیئرمین نے کہا کہ اتفاق سے نئی حج پالیسی بنانے کے سلسلے میں جب وزارت اقلیتی امور کے ذریعے تشکیل کردہ ہائی پاور کمیٹی سعودی عرب گئی تو وہیں معلوم ہوا کہ کئی دوسرے ملکوں سے خواتین بغیر محرم کے حج کے لیے آتی ہیں ۔اسی کو دیکھتے ہو 45 سال سے زیادہ کی عورتوں کو بغیر محرم کے جانے کی اجازت دی گئی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *