حامد امروہوی کی دو کتابوں کاہوا اجراء


نئی دہلی، ۸؍ فروری(نامہ نگار) معروف نعت گو شاعر رؤف امروہوی کی یاد میں یہاں انڈین اسلامک کلچرل سینٹر میں کل ہند نعتیہ مشاعرہ کا اہتمام کیا گیا۔ ہمالیہ ڈرگس کمپنی کے مالک ڈاکٹر سید فاروق کی صدارت میں منعقدہ اس روحانی محفل میں رؤف امروہوی کے فرزند اور نعتیہ شاعری میں اپنا منفرد مقام بنانے چکے حامد امروہوی کی دو کتابوں ’نعت سے نعت گوئی ‘ اور ’اس پار سے اس پارتک‘ کا اجراء بھی عمل میں آیا۔ واضح ہوکہ حامد امروہوی برسوں سے امریکہ میں مقیم ہیں اور اپنے خاندان کی روایت کو باقی رکھتے ہوئے وہاں بھی نعتیہ مجلسوں کا اہتمام کرتے رہتے ہیں۔ ان کے علمی کارناموں اور شاعرانہ صلاحیتوں کے اعتراف میں معروف شاعر احمد علی برقی اعظمی نے انہیں منظوم خراج عقیدت پیش کیا۔ اس میں برقی اعظمی نے حامد امروہوی کی کتاب ’اس پارسے اس پارتک ‘ کے عنوان کا بخوبی استعمال کیا ، جسے سامعین نے کافی پسند کیا۔
حامد کا اعجاز ہنر اس پار سے اس پار تک
اب ہر طرف ہے جلوہ گر اس پارسے اس پار تک
ہیں وہ سخنور نامور اس پار سے اس پار تک
اہل نظر ہیں باخبر اس پار سے اس پار تک
نور نگاہ دیدہ ور اس پار سے اس پار تک
ہے سب کا منظور نظر اس پار سے اس پار تک
امروہہ سے امریکا تک سب کے ہیں وہ ورد زباں
ہیں نعت گو اک معتبر اس پار سے اس پار تک
ہے ان کا اسلوب بیاں ارباب دانش پر عیاں
آئینہ نقدو نظر اس پار سے اس پار تک
ہیں وہ رؤف امروہوی کے ایک سچے جانشیں
معروف ہے جن کا پسر اس پار سے اس پار تک
مرغوب ہے سب کے لئے ہے جن کو اردو سے شغف
یہ نخل دانش کا ثمر اس پار سے اس پار تک
ہے مرجع اہل نظر ان کا کلام جانفزا
ہے درد دل کا چارہ گر اس پار سے اس پار تک
ان کے جلو میں ضوفشاں ہے ایک ادبی کہکشاں
روشن ہے جو مثل قمر اس پار سے اس پار تک
ہے سرحدوں سے ماورا اس کے سخن کا دایرہ
برقی کی ہے سب پر نظر اس پار سے اس پار تک
?
حامد امروہوی دائیں) کی کتاب’ نعت سے نعت گوئی تک ‘ کا اجراء کرتے ہوئے ڈاکٹر سید فاروق، ماجد دیوبندی، گلزار دہلوی و دیگر)

?
(حامد امروہوی کی کتاب ’اس پار سے اس پارتک ‘ کا اجراء کرتی ہوئیں شمع افروز زیدی، ساتھ میں ہیں ڈاکٹر سید فاروق ، ماجد دیوبندی اور گلزار دہلوی)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *