علاج و معالجہ کی بنیادی سہولت انسان کا حق ہے:ایڈووکیٹ نازیہ

New Image9
کولکاتا،(پریس ریلیز):
فورم فارآرٹی آئی ایکٹ اینڈ اینٹی کرپشن اور ویل وشرس کلب کے اشتراک سے ہوڑہ کے دور افتادہ باگنان علاقہ میں ایمبولنس کے لیے آکسیجن سلنڈر کی فراہمی کی گئی ۔اس موقع پر لگائے گئے کیمپ میں غریبوں میں سردی سے بچاؤ کے سامان کے طور پر کمبل بھی تقسیم کیے گئے ۔
الوبیڑیا سب ڈویژن کے باگنان میں واقع بائنان گرلس ہائی اسکول میں ہوئے اس جلسہ کی مہمان خصوصی فورم کی چیئرپرسن ایڈووکیٹ نازیہ الٰہی خان تھیں۔انہوں نے اپنے ہاتھوں سے ایمبولنس کے لیے آکسیجن سلنڈر سپرد کیا اور غریبوں میں کمبل تقسیم کیے ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ صحت اور علاج و معالجہ کی بنیادی سہولت ہر انسان کا حق ہے اور یہ ہر صاحب استطاعت انسان کا فرض ہے کہ اپنے جیسے انسانوں کی بیماری اور پریشانی میں ان کے ساتھ کھڑا ہو،ان کے لیے مدد فراہم کرے ۔ انہوں نے کہا کہ ویل وشرس کلب نے ان کے ساتھ تعاون کیا اورا نہوں نے اپنی بساط کے مطابق بیماروں کی بہتر نگہداشت اور دیکھ ریکھ کے لیے آکسیجن سلنڈر مہیا کرایا ۔وہ یہ سمجھتی ہیں کہ دکھی انسانیت کی خدمت کرنے سے خدا تعالیٰ کی خوشنودی حاصل کی جاسکتی ہے۔ انسانی ہمدردی کے تحت ضرورتمندوں کی خدمت کر کے آخرت کو سنوارا جا سکتا ہے۔
New Image0
ایڈووکیٹ نازیہ نے کہا کہ مقامی افراد جو علاقہ کے ضرورتمندوں کی امداد کا جذبہ رکھتے ہیں اور یہاں کے غرباء ،نادار وں اور مفلسوں کے علاج و معالجہ کے ساتھ ساتھ ان کی مدد کرنے کو صدقہ جاریہ سمجھتے ہیں،وہ مبارکباد کے مستحق ہیں ۔ویل وشرس کلب کے عہدیداروں نے انہیں بتایا تھا کہ اس علاقہ میںآکسیجن سلنڈر کے ساتھ ایمبولنس سروس کی شدید کمی تھی جس کی وجہ سے کئی جانیں بھی جا چکی ہیں۔اس لیے ضرورت ہے کہ یہاں چلنے والے ایمبولنس میں آکسیجن سلنڈر بھی مہیاکرایاجائے ۔
اس موقع پر سیکڑوں غریب افراد میں سردی سے بچاؤ کے لیے کمبل بھی تقسیم کیے گئے ۔
)۰۰۰(

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *