چودھری محبوب علی قیصر کی والدہ کا انتقال

پٹنہ(نامہ نگار):

رحمت بانو
رحمت بانو

کھگڑیا لوک سبھا حلقہ سے رکن پارلیمنٹ چودھری محبوب علی قیصر کی والدہ رحمت بانو کا جمعرات کو صبح چھ بجے انتقال ہوگیا ۔ وہ ۸۱؍ برس کی تھیں۔ ان کے پسماندگان میں دوبیٹے اور ایک بیٹی ہیں۔بڑے فرزند چودھری فاروق صلاح الدین اور چھوٹے بیٹے محبوب علی قیصرہیں۔ مرحومہ بڑی دیندار اور نیک سیرت تھیں۔وہ غریبوں اور ضرورتمندوں کی ہرممکن مدد کیا کرتی تھیں۔ ان کی نماز جنازہ آج چار بجے پاٹلی پترا کالونی میں پڑھائی جائے گی۔ اس کے بعد سڑک کے راستے سے ان کے جسد خاکی کو سمری بختیار پورلے جایا جائے گا ، جہاں جمعہ بعد خاندانی قبرستان میں ان کی تدفین عمل میں آئے گی۔ سمری بختیارپور کے باشندہ اور گذشتہ ۳۵؍برسوں سے چودھری خاندان سے وابستہ محمد فیروزعالم نے نم آنکھوں سے بتایا کہ مرحومہ نے ہی بچپن سے انہیں پالا پوسا۔وہ اپنے پورے گھر کو سنبھالنے کے ساتھ ہی آس پڑوس کے لوگوں کا بھی خیال رکھتی تھیں۔ خاص طور سے غریب لڑکیوں کوسلائی کڑھائی سکھانے کے لیے وہ پاٹلی پترا اور سبزی باغ میں بوٹیک سینٹر چلاتی تھیں۔ فیروز عالم نے کہا کہ مرحومہ رحمت بانو کے انتقال سے میرے ساتھ ساتھ بہت سے لوگوں کے سر کا سایہ چلا گیا۔انہوں نے کہا کہ مرحومہ غریب لڑکیوں کی شادی کرانے میں بڑی مدد کرتی تھیں۔ اس دور میں ان کے جیسی خاتون کا ملنا بہت مشکل ہے۔ مرحومہ رحمت بانو کے شوہر چودھری محمد صلاح الدین بہار کے معروف سیاسی رہنما تھے۔ وہ ریاست میں ڈاکٹر جگن ناتھ مشرا کی حکومت میں وزیر بھی رہے تھے۔ ان کا انتقال اگست ۱۹۸۹ء میں ہوا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *