ایران کے ساته تجارت کو فروغ دینے پر ملیشیا کا زور

کوالا لمپور، ارنا: ملیشیا کے وزیر برائے صنعت و غیرملکی تجارت مصطفی محمد نے کہا ہے که ان کا ملک اسلامی جمہوریه ایران کے ساته تجارتی تعلقات کو بہتر بنانے کا خواہاں ہے اور اسی مقصد کے لیے ملیشیائی حکام جلد ہی تہران کا دوره کریں گے.

3051698-4882022
ملیشیائی وزیر مصطفی محمد نےجمعہ کے روز سنگاپور میں گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا که ایران جوہری معاہدے کے نفاذ کے پس منظر میں ان کا ملک ایران کے ساته باہمی تعاون کو فروغ دینے کے لیے پُرعزم ہے.

انہوں نے کہا که ملیشیا ایران کو اپنی مصنوعات بالخصوص ناریل تیل کی برآمدات میں اضافه کرے گا.

مصطفی محمد نے کہا که ملیشیا کی غیرملکی تجارتی اتهارٹی اعلی حکام کے ایران کے دوروں کا پروگرام بنا رہی ہے.
قابل ذکر ہے کہ ایران اور ملیشیا کے مابین ڈیڑھ ارب ڈالر سے زیادہ مالیت کا سالانہ کاروبار ہوتا ہے۔ گذشتہ سال ایران نے ۵۰۰ ملین ڈالر کی مالیت کی اشیاء ملیشیا کو برآمد کی تھی جس میں ۷۵ فیصد پٹرولیم مصنوعات تھیں۔
ادھر ملیشیا نے ایران کے تیل، گیس اور ٹکنالوجی کے شعبوں میں سرمایہ کاری کرنے میں اپنی دلچسپی دکھائی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *