اجتماعی نکاح تقریب کا اہتمام وقت کی ضرورت

وجیہ احمد تصور کے قلم سے ✍️
 آج کے حالات میں جب کہ شادی بیاہ میں ناجائز خرچ اور بےجا مانگوں نے غریب کی بچیوں کو ماں باپ کی چوکھٹ پر ہی سر کے بال پکانے پر مجبور کر دیا ہے ایسے وقت میں کچھ تنظیمیں آگے بڑھ کر ان غریبوں کے لئے فرشتے بن کر آرہے ہیں اور ان کے سر سے کنواری بیٹیوں کے بوجھ کو کم کرنے کے لئے اجتماعی شادیوں کا پروگرام انعقاد کرتے ہیں اور ان کی ضروریات کے سامان ان کے حوالے کر ان کو سسرال رخصت کر ایک ایک شاندار اور نیک کام کو انجام دے کر قابل تعریف کام کر رہے ہیں اور ایسے کام کو کرنے والے تہہ دل سے مبارک باد کے مستحق ہیں. آج برکت علی اور ان کے ساتھیوں نے اس شاندار کارکردگی کا جو مظاہرہ کیا ہے اس کے لئے وہ مبارکباد کے مستحق ہیں .. برکت علی فاؤنڈیشن نے سمری بختیار پور کے پھنساہا میں  ایک شاندار تقریب کا اہتمام کر 50 جوڑے کی اجتماعی نکاح کی محفل سجائی جس میں ہزاروں افراد نے شرکت کر نو عروس جوڑوں کو دعاؤں سے نوازہ. تقریب کا باضابطہ آغاز تلاوت قرآن پاک اور اس کے بعد مہمان خصوصی اور سنٹرل حج کمیٹی کے چیئرمین و ممبر پارلیمنٹ جناب چودھری محبوب علی قیصر نے فیتہ کاٹ کر کیا. اس موقع پر سماج کے سبھی طبقوں کے اہم لوگوں نے شرکت کر نوعروس جوڑوں کو دعاؤں سے نوازا.آئندہ بھی اسی طرح کے پروگراموں کا انعقاد ہوتا رہا تو یقین مانئے نہ صرف غریب بچیوں کی شادی آسان ہوجائے گا بلکہ مسلم سماج میں بھی وبا کی طرح پھیلتے تلک جہیز کے مسئلے پر بھی کنٹرول ممکن ہوسکے گا.
Facebook Comments
Spread the love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply