کیوٹی اسمبلی حلقہ میں گرلس ہائی اسکول اور کالج کی سخت ضرورت: نظرعالم


اسراہا میں ایم۔ایس۔ پبلک اسکول کا ہوا افتتاح، داخلہ اور رجسٹریشن مفت

دربھنگہ:۔ (نمائندہ) کیوٹی اسمبلی حلقہ کے اسراہا گاؤں میں درجہ ایک سے چھ تک کی تعلیم کے لئے ایم ایس پبلک اسکول کا قیام عمل میں آیا۔ اسکول کے افتتاحی تقریب تلاوت کلام پاک سے شروع ہوا۔ بطور مہمان خصوصی آل انڈیا مسلم بیداری کارواں کے قومی صدرنظرعالم نے شرکت کی۔ تلاوت کلام پاک کے بعد افتتاحی تقریب میں تشریف لائے مقامی باشندگان اور سیاسی و سماجی کارکنان نے اسکول کے ڈائرکٹر ذکی احمد’’دلو‘‘ کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے ہرممکن تعاون دینے کی بات کی۔جس حلقہ میں اس اسکول کا قیام عمل میں آیا ہے وہ بہت ہی پچھڑا ہوا حلقہ ہے۔ وہاں کے بچوں کے بہتر مستقبل کے لئے ذکی احمد نے بڑا کام کیا ہے۔ اسکول کے قیام سے حلقہ میں خوشی کی لہر دیکھی جارہی ہے۔
افتتاحی تقریب میں شرکت کے موقع پر بطور مہمان خصوصی نظرعالم نے کیوٹی اسمبلی حلقہ کے اندر تعلیم کی کمی پر بولتے ہوئے کہا کہ یہ ایک ایسا حلقہ ہے جہاں ایک بھی ہائی اسکول ایسا نہیں ہے جہاں لڑکیوں کی تعلیم ہوسکے اور نہ ہی ایک بھی کالج ہے۔ جب کہ یہاں ہمیشہ سے سیاسی پارٹیوں کے باہری لیڈران نے قبضہ کر علاقے کی ترقی کا سبزباغ یہاں عوام کو ہمیشہ دکھاتے رہے ہیں لیکن تعلیم کے معاملے میں کیوٹی اسمبلی حلقہ پورے بہار میں سب سے پچھڑا ہوا ہے۔ یہاں ایک کالج اور لڑکیوں کے لئے ہائی اسکول کی سخت ضرورت ہے۔ مسٹرعالم نے یقین دلایا ہے اس معاملے پر جلد ہی وزیراعلیٰ نتیش کمار کو لکھوں گا اور علاقے میں جتنی جلد ہوگا لڑکیوں کے لئے الگ سے ہائی اسکول اور کالج کے لئے کوشش کروں گا۔ مسٹرنظرعالم نے علاقے کی عوام بالخصوص اسراہا گاؤں کے ذمہ داروں سے درخواست کرتے ہوئے ذکی احمد کے ساتھ تعاون کرنے کی بات کہی اور اسکول کومضبوطی کے ساتھ آگے بڑھانے میں مدد کرنے کو کہا۔
اسکول کے ڈائرکٹر ذکی احمد نے اسکول کے بارے میں تفصیل سے بتاتے ہوئے کہا کہ جتنی بھی سہولیات ممکن ہوگی غریب بچوں کے ساتھ کی جائے گی ۔ ابھی فی الحال داخلہ اور رجسٹریشن مفت کیا جارہا ہے ۔ غریب بچوں کے ماہانہ فیس پر بھی غور کروں گا ساتھ ہی اگر کسی گھر سے ایک ہی فیملی کے تین بچے ہمارے اسکول میں داخلہ لیتے ہیں تو دو ہی بچوں کی ماہانہ فیس لگے گی۔انہوں نے بھی تمام باشندگان سے اپیل کرتے ہوئے اسکول کی مددکے لئے کہا۔ذکی احمد نے لوگوں کو یقین دلایا کہ ہرحالت میں تعلیم کے معاملے میں کوئی سمجھوتہ نہیں کروں گا۔ میرا مقصد صرف تعلیم کے نام پر روپیہ کمانا نہیں ہے جو دوسرے کئی اسکول کے لوگ کرتے ہیں۔ اچھی تعلیم اچھا معاشرہ اور تربیت ہمارے اسکول کے بچوں کے لئے اولیت ہوگی۔افتتاحی تقریب کے موقع پر اسراہا کے سابق مکھیا عبدالمالک ، کیوٹی نائب پرمکھ کے شوہر ضیاء الہدیٰ چھوٹو، سرپنچ طاہرانصاری،جدیو لیڈر احمدرضا ببلو،ساحل عباسی، موجودہ مکھیا کے شوہر خورشید عالم، بابو صاحب منڈل، شری نارائن منڈل، سچدیو چوپال، محمد توقیر، عبدالقیوم انصاری، محمدسبیل، بپت رام، ابرار احمد، محمدشاہد عرف کاری کے علاوہ باشندگان اسراہا موجود تھے۔اسکول میں سی بی ایس ای اور بی ایس ای بی نصاب پرچلے گا۔
Facebook Comments
Spread the love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply