سمری بختیار پور میں ڈکی سے اڑایا 2 لاکھ روپے

 
وجیہ احمد تصور کی رپورٹ ✍
سہرسہ …… ایک طرف آج کل بینک سے پیسہ نکالنے ویسے ہی مشکل ہے اور اگر بینک مہربانی کرکے  پیسہ دے دے تو پھر محفوظ گھر تک پہنچ ہی جائے گا اس کی بھی ضمانت نہیں ہے جس کا تازہ مثال بنے ہیں سمری بختیار پور سب ڈویژن کے بھٹوني پنچایت کے  سابق مکھیا  منوج  یادو.  گذشتہ کچھ سالوں سے “ڈکی کھول پیسہ غائب”  واردات کرنے والے مجرموں نے سمری بختیار پور کو نشانے پر لے رکھا ہے.
تازہ واقعہ کے شکار بنے منوج یادو سمری بختیار پور مارکیٹ واقع کینرا بینک سے دو لاکھ  روپے نکال کر  اپنے گھر بھٹپورا جانے کے لئے رانی  باغ مارکیٹ میں موٹر سائیکل روک کر سبزی خریدنے لگے. اتنے میں بینک سے ہی پچھا کر رہے تین موٹر سائیکل پر سوار قریب نصف درجن بدمعاشوں میں ایک موٹر سائیکل سوار نے ڈکی  کھول پولتھين میں رکھے کیش نکال آرام سے مشرق کی سمت میں چلتے بنا. جائے حادثہ کے ارد گرد لگے دکانوں کے سی سی ٹی وی کیمرے میں  واردات قید ہو گیا ہے اور پولیس اسی کی مدد سے جرائم پیشہ افراد کے گردن تک قانون کے لمبے ہاتھ کو لے جانا چاہتی ہے. فی الحال پولیس شک کی بنیاد پر ایک اوٹو ڈرائیور کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ کر رہی ہے
  • واردات انجام دیتے ڈکی چور
Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *