بہار کی بیٹی شریاشی سنگھ نے گولڈ میڈل حاصل کر بہار کا نام روشن کیا

وجیہ احمد تصور کے قلم سے ✍️

سابق مرکزی وزیر آنجہانی دگ وجے سنگھ کی صاحبزادی اور ہندوستانی خاتون نشانہ باز شریاشی   سنگھ نے آسٹریلیا کے گولڈ کاسٹ میں منعقد 21 ویں دولت مشترکہ کھیلوں میں منگل کو خواتین کے ڈبل ٹریپ مقابلے میں طلائی تمغہ حاصل کر نہ صرف ہندوستان کی جھولی میں 12 واں گولڈ میڈل ڈالا بلکہ بہار کا نام بھی روشن کر دیا.  جبکہ مرد نشانہ باز اوم متھروال اور انکور متل نے گولڈ کوسٹ میں کانسے کے تمغے اپنے نام کئے ۔شریاسی بہار کے جموئی ضلع کے گدھور کی رہنے والی اور سابق ممبر پارلیمنٹ پوتول کماری اور سابق وزیر مرحوم  دگ وجے سنگھ کی صاحبزادی  ہیں۔ ہندوستان کے لیے یہ آسٹریلیا کے گولڈ کوسٹ میں نشانہ بازی میں یہ چوتھا طلائی اور اوورآل 12 واں گولڈ میڈل ہے ۔ نشانہ بازی میں شریاسی کے طلائی تمغہ کے علاوہ اوم نے مردوں کے 50 میٹر پسٹل مقابلے میں 201.1 کے اسکور کے ساتھ کانسے اور انکور نے فائنل میں 53 کے اسکور کے ساتھ کانسہ جیتا۔ ہندوستان کو 50 میٹر پسٹل مقابلے میں اس وقت گہری مایوسی ہاتھ لگی جب دفاعی چمپئن جیتو رائے اپنے خطاب کا دفاع نہیں کر سکے اور آٹھویں نمبر پر رہ کر باہر ہو گئے ۔ جیتو نے اس سے پہلے 25 میٹر پسٹل مقابلے میں طلائی تمغہ جیتا تھا۔ شریاسی¸ سے پہلے ہی تمغہ کی کافی امیدیں تھیں اور انہوں نے بھی مایوس نہیں کیا۔ خواتین کی ڈبل ٹریپ مقابلے کے فائنل میں شریاسی اور آسٹریلیا کی ایما کاکس 96 اسکور کے ساتھ برابری پر تھیں اور شوٹ آف میں شریسی نے جیت حاصل کرتے ہوئے طلائی تمغہ جیتا جبکہ کاکس کو نقرئی سے اکتفا کرنا پڑا۔ اس مقابلہ کا کانسہ اسکاٹ لینڈ کی لنڈا پیئرسن کو ملا جنہوں نے فائنل میں 87 کا اسکور بنایا۔ 26 سالہ شریاشی  نے 10 مضبوط کھلاڑیوں کی فیلڈ میں حیرت انگیز کھیل دکھاتے ہوئے 24، 25 ، 22 اور 25 کے اسکور کیے۔

Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *