شری شری اور ارنب بھی رہے طلبا کے نشانے پر


نئی دہلی، ۱۶؍ مارچ (نامہ نگار) جواہرلعل نہرو طلبا یونین کی آواز پر ۱۵؍ مارچ کو قومی راجدھانی کے منڈی ہاؤس سے پارلیمنٹ تک نکالے گئے آزادی مارچ میں مظاہرین نے جہاں آزادی آزادی کے جم کر نعرے لگائے وہیں وزیر اعظم نریندر مودی اور فروغ انسانی وسائل کی مرکزی وزیر اسمرتی ایرانی کے ساتھ ساتھ شری شری روی شنکراور معروف صحافی ارنب گوسوامی کے خلاف بھی خوب نعرے بازی ہوئی ۔ مارچ کے دوران طلباء گاؤں مانگے آزادی، شہروں میں بھی آزادی، عورت مانگے آزادی، مسلمان مانگے آزادی ، آدیباسی مانگے آزادی اور آزادی ہی آزادی کے نعرے لگاتے نظر آئے۔ ان نعروں اور جوش سے اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ وہ کتنا زیادہ غم و غصہ میں ہیں اور حکومت سے کیا چاہتے ہیں؟

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *