سوامی اگنی ویش پر انتہا پسندوں نے کیا حملہ

رانچی… (نمائندہ) ….  جھارکھنڈ پہنچے سماجی کارکن ومذہبی رہنماسوامی اگنیویش کی کچھ لوگوں نے پٹائی کردی ،ان کے کپڑے پھاڑدےئے گئے۔میڈیارپورٹس کے مطابق، الزام ہے کہ واقعہ کے پیچھے بھارتیہ جنتایووامورچہ کے کارکنان کا ہاتھ ہے۔رپورٹس کے مطابق، سوامی اگنیویش جھارکھنڈ کے پاکوڑپہنچے ہوئے تھے۔وہ ایک پروگرام میں حصہ لینے والے تھے ۔اس سے پہلے ان کے ہوٹل کے باہرہی کچھ لوگوں نے ان پرحملہ کردیااورپٹائی کردی۔اتناہی نہیں ان کے کپڑے تک پھاڑدےئے۔میڈیارپورٹس کے مطابق ،سوامی اگنی ویش نے الزام لگایاہے کہ بھارتیہ جنتایووا مورچہ اوراے بی وی پی کے کارکنان نے ان پرحملہ کیاہے۔ اطلاعات کے مطابق سوامی اگنی ویش کوشدید چوٹ آئی ہے، ان کاموبائل فون بھی چھین لیا گیا ہے۔ بعد میں پولیس بھی پہنچ گئی ہے۔
خبروں کے مطابق، میں بی جے پی سمیت اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد، وشو ہندو پریشد، بجرنگ دل جیسی تنظیموں کے کارکنان صبح سے سوامی اگنی ویش کے ہوٹل کے سامنے جمع ہورہے تھے۔دراصل سوامی اگنی ویش کے پاکوڑ دورہ کا ضلع کے ہندو وادی تنظیم صبح سے ہی مخالفت کررہے تھے۔ یہ مخالفت سوامی کے ذریعہ مبینہ طور پرسناتن مذہب پر کئے گئے تبصرہ اور بیف پرعائد پابندی سے متعلق بیان کی وجہ سے ہورہی تھی۔ دراصل بی جے پی کارکنان پہلے سے ہی کالا جھنڈا دکھا کر ان کی مخالفت کررہے تھے۔ ایسے میں جیسے ہی سوامی ہوٹل سے باہر آئے، کارکنان نے ان پر حملہ کردیا۔
ادھرآل انڈیا مسلم مجلس مشاورت کے صدر نوید حامدنے اس حملہ کی سخت مذمت کی ہے۔اپنے ٹوئٹر پر انہوں نے مذمت کرتے ہوئے لکھاکہ جھارکھنڈ میں سنگھی دہشت گردوں کی جانب سے سوامی اگنی ویش پر ہونے والے حملہ کی ہم سخت مذمت کرتے ہیں۔ہمارا مطالبہ ہے کہ حملہ آور کو فوران گرفتار کیا جائے اور یہ امید کی جاتے ہے کہ جھارکھنڈ پولس کسی سیاسی دباؤمیں نہیں آئے گی
Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *