سہرسہ میں تبریز انصاری کے قاتلوں کو پھانسی کی مانگ کو لیکر احتجاجی مظاہرے

سہرسہ (نمائندہ) ماب لنچنگ کے شکار تبریز انصاری کیلئے آج سہرسہ شہر میں ہزاروں لوگوں نے احتجاج مظاہرہ کرکے انصاف کی صدابلندکی ۔مظاہرین نے پرامن طریقے پر ریلی کی شکل میں سہرسہ اسٹیڈیم سے شنکر چوک تک پیدل مارچ کیابعد میں دس رکنی وفد نے ڈی ایم محترمہ شیلجہ شرماکے ذریعہ صدرجمہوریہ ،ریاستی گورنر کو میمورنڈم پیش کرکے تبریزکے قاتلوں کو پھانسی اور اہل خانہ کو 25لاکھ روپے معاوضہ کے ساتھ سرکاری نوکری دینے کامطالبہ کیا۔

پ

­

اس موقع پر جامع مسجد سہرسہ بستی کے امام وخطیب مولاناسہراب ندوی نے کہاکہ تبریز کاقتل پوری انسانیت کاقتل ہے ،مذہب کے نام پر جولوگ غنڈہ گردی کرتے ہیں وہ دراصل ملک دشمن اور حقیقی دہشت گردہیں ایسے لوگوں کو عبرت ناک سزاملنی چاہئے۔وژن انٹرنیشنل اسکول سہرسہ کے بانی ومنیجنگ ڈائریکٹر شاہنواز بدر قاسمی نے کہاکہ شہید تبریز انصاری کوجس بے رحمی کے ساتھ ماراگیایہ ہندوستان جیسے سیکولرملک پر ایک بدنماداغ ہے ،موجودہ حکومت کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ ملک کے ہر شہری کے تحفظ کو یقینی بنائیں ،انہوں نے کہاکہ یہ مذہبی دہشت گردی ہے جس کے خلاف سخت قانونی کاروئی کی ضرورت ہے تاکہ تبریز جیسا حادثہ کسی اور کے ساتھ نہ ہو،بدرقاسمی نے کہاکہ یہ سوچی سمجھی سازش کے تحت ایسے واقعات پیش آرہے ہیں تاکہ اس ملک کے مسلمانوں کو دہشت میں ڈال دیاجائے انہوں نے ماب لنچنگ کے شکار تمام مظلومین کوانصاف دلانے کیلئے عوامی بیداری پرزوردیتے ہوئے کہاکہ جو لوگ مذہب کے نام پر نفرت پھیلانے چاہتے ہیں وہ دہشت گردہیں ان کے ساتھ دہشت گردجیساہی سلوک ہوناچاہئے تاکہ حکومت اورانتظامیہ پر اعتماد برقراررہ سکے۔

یوتھ لیڈر گڈو حیات نے کہاکہ تبریز انصاری کی موت کیلئے مودی سرکار ذمہ دار ہے،جب تک ہجومی تشدد کے مجرمین کو پھانسی پر لٹکایانہیں جائے گاتب تک یہ سلسلہ جاری رہے گا۔جاوید شیخ نے کہاکہ مسلمانوں کو مایوس ہونے کی ضرورت نہیں ہے بلکہ حوصلہ مندی کے ساتھ حالات کامقابلہ کرناہوگا،راجدلیڈر میررضوان نے حاضرین سے کہاکہ انصاف کے جدوجہد میں ہم سب مل جل کر ظلم وناانصافی کے خلاف متحدہوں تاکہ ہر مظلوم کو انصاف مل سکے ۔

دیگر مقررین میں راجدلیڈر جاویدانورچاند،مولاناآفتاب ندوی،نعیم صدیقی ،ڈاکٹر رفعت پرویزوغیرہ کے نام قابل ذکرہیں۔

Facebook Comments
Spread the love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply