اردوایجوکیشن بورڈ کے سینٹرل آفس کا افتتاح

تصویر : اردوایجوکیشن بورڈ کے سینٹرل آفس کے باہر گروپ پوز دیتے ہوئے شبنم صدیقی،ارشد صدیقی،این ایم حق، محمدپرویز،محمدریحان،نورالنساء،اسماء انصاری،ناہید انجم،مریم فاطمہ صدیقی،عالیہ شیخ
تصویر :
اردوایجوکیشن بورڈ کے سینٹرل آفس کے باہر گروپ پوز دیتے ہوئے شبنم صدیقی،ارشد صدیقی،این ایم حق، محمدپرویز،محمدریحان،نورالنساء،اسماء انصاری،ناہید انجم،مریم فاطمہ صدیقی،عالیہ شیخ

نئی دہلی، ۷؍ اپریل: حکومت ہند سے منظورہ شدہ اقلیتی ادارہ ’اردوایجوکیشن بورڈ ‘نے اپنے سینٹرل آفس کا افتتاح نیوفرینڈس کالونی ،ایشور نگر میں کیاہے۔آفس کا پورا پتہ اردوایجوکیشن بورڈ کستوربابالیکاودیالیہ،نیوفرینڈس کالونی ایشور نگر ہے۔اس کے ساتھ ہی بورڈکے تحت جاری اردونیوز پورٹل ’اردوخبر ڈاٹ کام‘کا آفس بھی یہیں منتقل ہوگیاہے۔اس موقع پر قرآن خوانی اورفاتحہ کی محفل منعقد ہوئی جس میںآفس کے تمام اسٹاف شریک ہوئے ۔

اردوایجوکیشن بورڈملک کا پہلا منظورشدہ اقلیتی تعلیمی بورڈ ہے جس کے ذریعے سی بی ایس اوراین سی ای آرٹی کے نصاب کے مطابق سکنڈری(دسویں)اورسنیئر سکنڈری(بارہویں)کا کورس کرایاجاتاہے۔ریاستی مدرسہ بورڈ سے فارغ ہونے والے طلبہ صرف آرٹس اورسوشل ورک میں ہی جاسکتے ہیں لیکن بورڈ کی خاص بات یہ ہے کہ یہاں سے پاس آؤٹ طلبہ آرٹس اورسوشل ورک کے علاوہ سائنس ،کامرس اورٹیکنالوجی سمیت تمام اسٹریم میں داخلہ لے سکتے ہیں۔یہاں سے فارغ ہونے والے طلبہ ملک کی مختلف یونیورسٹیوں میں داخلہ لے چکے ہیں۔اب تک ملک کی تمام ریاستوں میں بورڈ کے سینٹرس قائم ہوچکے ہیں جہاں سال میں دوبارسکنڈری (دسویں)اورسنیئر سکنڈری(بارہویں)کے امتحانات منعقد ہوتے ہیں۔اس کے علاوہ بیرون ملک میں سعودی عرب،کویت،شارجہ،دوبئی،قطر اوربحرین سے بھی بورڈکے اسٹڈی سینٹرکھولے جانے کی تجاویز آرہی ہے جس پربورڈ کے ارباب حل و عقد غور کر رہے ہیں۔ بورڈ نے تمام سینٹروں میں مالی طور سے پسماندہ طلبہ کے لیے خاص رعایت دی ہے جبکہ خواتین کے اندر تعلیم کے فروغ کے لیے حکومت ہند کی اسکیم’بیٹی پڑھاؤبیٹی بچاؤ‘کو اپنے یہاں نافذ کیاہے جس کے تحت طالبات کو اسکالر شپ دینے کا پروگرام ہے۔

اس موقع پر بورڈ کی ڈائریکٹرپروفیسرسیماحسن نے کہاکہ بورڈ حکومت کے تعلیمی خاکوں میں رنگ بھرنے کے لیے پوری طرح سرگرم عمل ہے۔بورڈ نے معیاری تعلیم کے لیے بھی کئی اہم اقدامات کیے ہیں جس کے تحت بورڈ نے اپنانصاب سی بی ایس ای اوراین سی ای آرٹی کے مطابق بنایاہے۔انہوں نے امید ظاہر کی ہے کہ اردوایجوکیشن بورڈ ملک کے اندر شرح تعلیم کے اضافہ میں اہم کردار اداکرے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *