تحفظ عظمت اولیاء کانفرنس اختتام پذیر

سمری بختیار پور سے ہمارے نمائندہ کی رپورٹ

کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے قادری میاں

سہرسہ: سمری بختیار پور کے اشرف چک میں واقع  خانقاہ صادقیہ کبیریہ  میں “تحفظ عظمت اولیاء کانفرنس” کے تحت بابا سرکار حضور سید شاہ زاہد میاں علیہ الرحمتہ و الرضواں کا دو روزہ   عرس انتہائ تزک و احتشام کے ساته منایا گیا.جس میں کثیر تعداد میں علماء مشائخ، مریدین و معتقیدین نے شرکت کی۔ اس موقع پر مرکزی خانقاہ اشرفیہ کچهوچهہ شریف سے تشریف لائے ہوئے پیر طریقت تاج الاولیاء حضور سید شاہ قادری میاں نے اپنے خصوصی خطاب میں اولیاء کرام اور ان کے آستانوں کو جسمانی اور روحانی بیماریوں سے شفایابی کا مرکز قرار دیتے ہوئے عوام سے اپنی قلبی وابستگیوں کو برقرار رکهنے کی ہدایات دیں. انہوں نے کہا کہ جب تک امت کے افراد ظاہری خرابیوں کے ساتھ اپنی باطنی خرابیاں دور نہیں کر لیتے، اپنی بلند منزل نہیں پا سکتے- انہوں نے اس ضمن میں اولیاء کرام کی شخصیات کو عزت و بلندی اور سکون و شانتی ۔ کے لیے بہترین آئیڈیل قرار دیا

اس موقع پر  اپنے خطاب  میں کولکاتا سے تشریف لائے مولانا محمد طاہر حسین مصباحی نے کانفرنس کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئے عوام کی فکری، اعتقادی اور عملی اصلاح پر زور دیا۔ صدارت شہزادہء بابا سرکار حضور سید شاہ ساجد میاں سجادہ نشیں خانقاہ کبیریہ اشرف چک نے کی، جبکہ مولانا رفیق وارث مصباحی نے اپنی شاندار نظامت کے ذریعہ سامعین کو پروگرام کے آخری مرحلے تک باندهے رکھا۔

مغربی بنگال کے محمد عثمان غنی اور ہریوا کی تحسین فاطمہ نے اپنی دلکش آواز سے سامعین کو خوب خوب محظوظ کیا۔

سجادہ نشیں سید ساجد میاں نے کہا کہ کولکاتا، یوپی ، بہار اور دیگر  ریاستوں و شہروں سے ان کے معتقیدین کا جم غفیر ہوتا ہے اور تمام حضرات یہاں سے فیضاب ہوکر جاتے ہیں۔ اس موقع پر سید شاہ وقاص اشرف، سید مدار اشرف، سید سلطان اشرف، سید محامد اشرف، سید ولی اشرف، سید گلزار اشرف، سید عبدالحنان اشرف، سید سراج اشرف، سید شجاع اشرف، مولانا محبوب عالم اشرفی، مولانا شمشیر عالم، مولانا محفوظ عالم اشرفی، جاوید اختر عرف گڈو، مہتاب عالم اشرفی، آفتاب عالم اشرفی، تحسین عالم اشرفی، نوید رضوان وغیرہ موجود تهے۔ اس موقع سے مزار پر چادر پوشی بهی کی گئی۔

Share

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *