ٹیم انڈیا کو ہرا کر ویسٹ انڈیز پہنچی فائنل میں

اسپورٹس ڈیسک
simonssممبئی، ۳۱؍ مارچ (سی این ایم) ویسٹ انڈیز نے ٹیم انڈیا کے ذریعہ دیے گئے ۱۹۳؍ رنوں کے بڑے ہدف کو کامیابی کے ساتھ پار کرکے فائنل کے لیے اپنی جگہ بنالی۔ ویسٹ انڈیز نے جے چارلس(۵۲)، سیمنس (۸۳ ناٹ آؤٹ ) اور اے رسل (۴۳ناٹ آؤٹ) کی شاندار اننگوں کی بدولت ۲؍ گیند باقی رہتے یہ میچ سات وکٹ سے جیت لیا۔ اس طرح کرس گیل (۵) اور سیموئلس (۸) کو سستے میں نمٹانے کا ٹیم انڈیا کو کوئی فائدہ نہیں ہوا۔ واضح ہوکہ ویسٹ انڈیز کے خطرناک بلے باز کرس گیل کے بلے کو روکنے پر ٹیم انڈیا نے خصوصی طور سے منصوبہ بندی کی تھی۔ اس کا اعلان ٹیم کے ذمہ داران پریس کانفرنس میں بھی کر چکے تھے۔ کرس گیل کے تعلق سے اپنی منصوبہ بندی کو عملی جامہ پہنانے میں ٹیم انڈیا شاید کامیاب بھی رہی کیونکہ وہ ۶؍ گیندوں میں صرف پانچ رن بناکر جسپریت بمرہ کی گیند پر بولڈ آؤٹ ہوگئے۔ اس کے بعد سیموئلس آئے مگر وہ بھی جلدی ہی چلتے بنے۔ لیکن ویسٹ انڈیز کے سلامی بلے باز جے چارلس اور دوسری وکٹ گرنے کے بعد میدان پر آنے والے ایل سیمنس نے ٹیم کو مشکل حالات سے نکالا اور بالآخر ویسٹ انڈیز نے صرف تین وکٹ کھوکر یہ میچ جیت لیا۔

اس سے پہلے ٹیم انڈیا نے ویسٹ انڈیز کے سامنے ۱۹۳؍ رنوں کا ہدف رکھا ۔ ویسٹ انڈیز نے ٹاس جیت کر پہلے گیندبازی کا فیصلہ کیا۔اجنکے رہانے اور روہت شرما کی جوڑی نے ٹیم کو مضبوط شروعات دی اور ۶۲؍ رنوں کی ساجھیداری کی۔ روہت شرما (۴۳) کے آؤٹ ہونے کے بعد وراٹ کوہلی میدان پر اترے۔ شروع میں وہ تھوڑے لڑکھڑائے ، اور ایک دو بار تو آؤٹ ہوتے ہوتے بچے، لیکن جب سنبھلے تو پھر پوری ٹیم کی ذمہ داری اپنے کندھوں پر اٹھالی۔ رہانے نے اگرچہ آہستہ کھیلا لیکن ٹیم کو مضبوطی دینے میں کوہلی کا اچھا ساتھ دیا۔ رہانے نے ۳۶؍ گیندوں پر ۴۲؍ رن بنائے۔ رسل نے رہانے کو ڈیون براوو کے ہاتھوں کیچ کرایا۔ پھر کوہلی کا ساتھ دینے کپتان مہندر سنگھ دھونی میدان پر اترے ۔ میدان پر کپتان کا ساتھ پانے سے کوہلی کو اور حوصلہ ملا۔ دونوں نے شروع میں سنبھل کر کھیلالیکن دیکھتے ہی دیکھتے دونوں کے بلوں سے رنوں کی برسات ہونے لگی۔ دونوں نے ٹیم کے اسکور کو مقررہ ۲۰؍ اووروں میں ٹیم کے اسکور کو ۱۹۲؍ رنوں تک پہنچا دیا۔ وراٹ کوہلی نے ۴۷؍ گیندوں پر ایک چھکا اور ۱۱؍ چوکوں کی مدد سے ۸۹؍ رن بنائے جبکہ دھونی نے ۹؍ گیند پر ۱۵؍ رنوں کی اننگ کھیلی۔
ٹیمیں:
ٹیم انڈیا: ایم ایس دھونی (کپتان)، روہت شرما، ویراٹ کوہلی، اجنكيا رہانے، منیش پانڈے، سریش رینا، روی چندرن اشون، روندر جڈیجہ، جسپريت بمراه، اشیش نہرا، ہاردک پانڈیا

ویسٹ انڈیز: ڈیرن سیمی (کپتان)، کرس گیل، جانسن چارلس، مارلن سیموئلس، لینڈل سیمنس، ڈوائن براوو، دنیش رام دین، آندرے رسل، جیسن ہولڈر، کارلوس بریتھویٹ، ایشلے نرس، جیروم ٹیلر، سلیمان بین، سیموئیل بدری.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *