ہم مشکلوں سے نکل کیوں نہیں پاتے ہیں؟

ذیشان

آپ نے اپنے بارے میں غور کیا ہے؟کیا آپ کو یاد ہے کہ پچھلی دفعہ کب خوب زور زور سے ہنسے تھے؟ ہم بات کسی ٹک ٹوک یا ویڈیو کو دیکھ کر ہنسنے کی نہیں کررہے ہیں۔ ہم بات کررہے ہیں آپس میں مل بیٹھ کر گپ کرتے ہوئے ہنسنے کی،یا کسی کامیابی پر خوش ہونے کی۔ ذرا یاد کریں ، اپنے کسی دوست سے ملنے کے بعد آپ نے کب کہا تھا کہ یار آج کا دن بہت اچھا رہا،آج میں نے اپنے مقصد میں کامیابی حاصل کر لی۔ ہمارا مشاہدہ ہے کہ ہم میں سے اکثر کو ان دنوں یہ موقع نہیں مل رہا ہے۔ جانتے ہیں کیوں؟ اس کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے کہ آپ جس چیز کی خواہش کرتے ہیں، اسے حاصل کرنے کے لیے وہ کام نہیں کرتے ہیں جس سے آپ کی خواہش پوری ہوجائے ۔ مثال کے طور پر آپ چاہتے ہیں کہ آپ کے بینک اکاؤنٹ میں خوب سارا پیسہ ہو، اچھا گھر ہو، اچھی گاڑی ہواور آپ اپنے گھروالوں اور دوستوں کے ساتھ خوب موج مستی کریں۔ لیکن یہ سب خواب بس خواب ہی رہ جاتے ہیں، کبھی حقیقت کا روپ نہیں لیتے۔ جانتے ہیں کیوں؟ کیونکہ آپ پیسہ کمانے کی کوشش نہیں کرتے۔ آپ کو جب معلوم ہے کہ پیسہ کام کرنے سے آئے گا،تجارت کرنے سے آئے گا، لکھنے سے آئے گاتو آپ ان سب سے دور بھاگنے کا بہانہ تلاش کرتے رہتے ہیں۔ جب پیسہ اور وہ بھی قانونی طریقہ سے کمانے کی بات ہے ، تو پھر دوسری چیزوں کی پروا کرنے کا کیا مطلب ہوسکتا ہے۔ آپ کو کام کرنے میں شرم آتی ہے۔ تجارت کرنے میں شرم آتی ہے۔ بھلا بتائیں ، ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھے رہنے سے تو پیسہ نہیں آئے گانا؟ تو پھر کام کرنے سے بھاگتے ہیں کیوں ہیں؟ہم میں سے کچھ لوگ پڑھائی کا بہانہ بنا کر کام کرنے سے کتراتے ہیں، کوئی یہ بہانہ کرتا ہے کہ تجارت میں بڑی پونجی کے بغیر کوئی فائدہ نہیں ہے۔ سچ پوچھیں تو یہ سب صرف کام نہیں کرنے کے بہانے ہیں۔ اسی وجہ سے آپ پیسوں کی کمی کا رونا روتے رہتے ہیں اور اگر اپنی عادت نہیں بدلی تو آئندہ بھی روتے رہیں گے۔ ہم اپنی اگلی تحریر میں آپ کو بتائیں گے کہ آپ اپنی پڑھائی کرتے ہوئے یا گھر پر رہتے ہوئے بھی کیسے کما ئی کرسکتے ہیں۔

Facebook Comments
Spread the love
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

Leave a Reply